اتوار, اپریل 14, 2013

الیکشن 2013 ، انتخابی مہم کے لئے سوشل میڈیا کا استعمال

1 تبصرے

پاکستان میں آئندہ انتخابات کے حوالے سے انتخابی مہم بھرپور طریقے سے جاری ہے اور پہلی بار سیاسی جماعتیں انتخابی مہم کے لئے بڑے پیمانے پر سوشل میڈیا کا استعمال کر رہی ہیں ۔ اگرچہ سوشل میڈیا پر پارٹیوں کی مقبولیت کامیابی کی ضامن تو نہیں ہے لیکن ملک کے پڑھے لکھے نوجوانوں اور بیرون ملک مقیم پاکستانیوں کو اپنی جانب متوجہ کرنے کا آسان ذریعہ ہے ۔ پاکستان میں سماجی رابطے کی ویب سائیٹ فیس بک استعمال کرنے والوں کی تعداد 80 لاکھ ہے جس میں سے زیادہ تر کی عمر 36 سال سے کم ہے اسی طرح سے 20 لاکھ افراد سماجی رابطے کی ویب سائٹ ٹویئٹر استعمال کرتے ہیں سماجی رابطوں کی ویب سائیٹ کا استعمال کرنے والے افراد ی اکثریت پڑھی لکھی ہے ۔ سیاسی جماعتیں سماجی رابطوں کی ویب سائیٹس کے ذریعے اپنی جماعتوں کی سرگرمیوں ، منشور ، نعروں اور لیڈروں کی تصاویر کے زریعے لوگوں کو اپنی جانب متوجہ کرتی ہیں ۔ جس سے عوام کو ان جماعتوں کے بارے میں جاننے کا موقع ملتا ہے سیاسی جماعتوں سے ہٹ کر انتخابات 2013 ء میں حصہ لینے والے مختلف جماعتوں کے امیدواران انفرادی طور پر بھی سوشل میڈیا کا استعمال کر رہے ہیں جن میں شہری علاقوں سے تعلق رکھنے والے امیدواران کی اکثریت ہے ۔ سوشل میڈیا کے ذریعے سیاسی جماعتیں لوگوں کے سوالوں کے جواب بھی دیتی ہیں اور اپنے منشور اور نعروں کے حوالے سے عوام میں آگاہی پیدا کرتی ہیں ۔ ماہرین کے مطابق سوشل میڈیا پاکستان میں ایک طاقت کے طور پر ابھرا ہے اور اس طاقت کو ملکی سطح پر سیاسی جماعتوں نے محسوس کرتے ہوئے اپنایا ہے پاکستان میں نوجوانوں کی تعداد سب سے زیادہ ہے ۔ نوجوان سماجی رابطوں کی ویب سائیٹوں کے ذریعے سیاستدانوں کا موازانہ بھی کرتے ہیں اور اپنے امیدواران اور سیاستدانوں کے حق میں دلائل دے کر ایک دوسرے کو قائل کرنے کی کوشش بھی کرتے ہیں


1 تبصرے:

آپ بھی اپنا تبصرہ تحریر کریں

اہم اطلاع :- غیر متعلق,غیر اخلاقی اور ذاتیات پر مبنی تبصرہ سے پرہیز کیجئے, مصنف ایسا تبصرہ حذف کرنے کا حق رکھتا ہے نیز مصنف کا مبصر کی رائے سے متفق ہونا ضروری نہیں۔

اگر آپ کے کمپوٹر میں اردو کی بورڈ انسٹال نہیں ہے تو اردو میں تبصرہ کرنے کے لیے ذیل کے اردو ایڈیٹر میں تبصرہ لکھ کر اسے تبصروں کے خانے میں کاپی پیسٹ کرکے شائع کردیں۔

.