اتوار, مارچ 31, 2013

جیو طلعت حسین

3 تبصرے

 معروف صحافی اور اینکر پرسن طلعت حسین نے نگراں وزیر اعظم میر ہزار خان کھوسہ کی طرف سے وفاقی وزیر اطلات کی پیشکش سے  معذرت کر کے پوری صحافی برادری کا سر فخر سے بلند کر دیا ہے ۔طلعت حسین نے کہاکہ صحافی کا کام تنقید، تحقیق اور تجزیہ ہے حکومت کرنا ہر گز نہیں ۔ صحافی کو ٹوپی گھما کر دوسری جانا زیب نہیں دیتا ، اگر صحافی کو سرکار میں شامل ہونا ہے تو صحافت چھوڑ دے ۔ سینئر صحافی ، دی نیوز کے ایڈیٹر انو سٹی گیشن انصار عباسی نے بھی طلعت حسین کی طرف سے وزارت اطلاعات کی پیشکش مسترد کرنے کے عمل کو سراہتے ہوئے کہا ہے کہ طلعت حسین کے اس اقدام سے پروفیشنل صحافیوں کی عزت و وقار میں اضافہ ہوا ہے ۔ حکومتی نوکریاں و عہدے صحافیوں کے لیے نہیں ہیں اور اگر صحافی اپنا اصل کام چھوڑ کر عہدوں و پُر کشش نوکریوں کے پیچھے بھاگنا شروع ہو گئے تو صحافت کون کرے گا ؟
 اگر سوچا جائے تو ایک صحافی کا کام تنقید، تحقیق اور تجزیہ ہے ۔ حکومت کی غلطیوں کو درست کر وانا ہے ،حکومت کرنا
ہر گز نہیں۔

کا ش نجم سیٹھی نے بھی یہ سوچا ہوتا



3 تبصرے:

آپ بھی اپنا تبصرہ تحریر کریں

اہم اطلاع :- غیر متعلق,غیر اخلاقی اور ذاتیات پر مبنی تبصرہ سے پرہیز کیجئے, مصنف ایسا تبصرہ حذف کرنے کا حق رکھتا ہے نیز مصنف کا مبصر کی رائے سے متفق ہونا ضروری نہیں۔

اگر آپ کے کمپوٹر میں اردو کی بورڈ انسٹال نہیں ہے تو اردو میں تبصرہ کرنے کے لیے ذیل کے اردو ایڈیٹر میں تبصرہ لکھ کر اسے تبصروں کے خانے میں کاپی پیسٹ کرکے شائع کردیں۔

.