جمعہ, مئی 24, 2013

خوش آمدید ، وزیر اعظم چائنا لی کی چیانگ

0 تبصرے

   پاکستانی عوام چینی وزیر اعظم لی کی چیانگ کے دورہ ٔپاکستان کا خیر مقدم کرتے ہیں ۔ چین پاکستان کا مخلص دوست ہے جس نے ہمیشہ  پاکستان سے تعلقات کو اہمیت دی ہے ۔چین اور پاکستان نہ صرف اچھے ہمسائے بلکہ ایک دوسرے کے حقیقی خیر خواہ اور سٹریٹجک پارٹنر ہیں ۔ پاکستان کی صنعتی ترقی اور عوام کے معیار زندگی کو بہتر بنانے کیلئے چین بیسیوں پراجیکٹس میں پاکستان کی مدد کررہا ہے۔شاہراہ ریشم ،گوادر پورٹ،جے ایف ٹھنڈر اور سینڈک پراجیکٹ سمیت درجنوں بڑے بڑے منصوبے پاکستان کی ترقی میں سنگ میل کی حیثیت رکھتے ہیں جو پاک چین دوستی کی  شاندار مثال ہیں۔چین کی طرف سے مسئلہ کشمیر کے حل کیلئے پاکستان اور بھارت کے درمیان ثالثی کی پیشکش خطے میں امن کے قیام کیلئے چین کی مخلصانہ کوششوں کا اظہار ہے ۔ امریکہ اور نیٹو افواج کی خطے میں موجودگی ،بھارت کو خطے کا تھانیدار بنانے اور چین کے کردار کو محدود کرنے کی کوششیں خطے کے امن کو برباد کرنے کی سوچی سمجھی سازش ہے جو کسی طرح بھی پاکستان اور خود بھارت کے مفاد میں نہیں، لیکن امریکہ چاہتا ہے کہ عالمی تجارت پر اس کا کنٹرول رہے اور پاکستان اور بھارت کی تجارتی منڈیوں پر چین کی اجارہ داری قائم نہ ہونے دی جائے۔پاکستان کے لوگ جانتے ہیںکہ امریکہ اور بھارت نے گوادر پورٹ چین کے ہاتھ لگنے سے روکنے کے لیے ایڑی چوٹی کا زور لگایا ، دونوں ملک پاکستان پر عالمی دبائو بڑھانے، کوئٹہ کو دہشت گردی کا نشانہ بنانے ،بلوچستان میں علیحدگی کی تحریکوں کی سرپرستی کرکے پاکستان کو عدم استحکام کا شکار کرنے اورچینی انجینئروں کو اغواء اور قتل کرنے جیسے واقعات میں ملوث رہے ہیں تاکہ کسی بھی صورت پاکستان اور چین کے درمیان نفرتیں پیدا کرکے ان کی دوستی میں رخنہ ڈالا جائے لیکن وہ اپنی ان مکروہ سازشوں میں کامیاب نہیں ہوسکے ۔چین سے مضبوط دوستی کی بنیادوں پر استوارخارجہ پالیسی خطے میں امریکہ کے عمل دخل کو ختم کرنے میں کردار ادا کر سکتی ہے۔ چین نے پرامن مقاصد کے لیے ایٹمی ٹیکنالوجی کی فراہمی سمیت جن بڑے ترقیاتی منصوبوں میں تعاون کرنے کی پیشکش کی ہے انہیں فوراً قبول کر کے ان منصوبوں پر عملدرآمد شروع کیا جائے۔  توقع ہے کہ پاکستان کی نو منتخب حکومت چین کے ساتھ دوطرفہ تعلقات کو فروغ دینے اور امریکی غلامی سے نکلنے کی پوری کوشش کر ے گی


0 تبصرے:

آپ بھی اپنا تبصرہ تحریر کریں

اہم اطلاع :- غیر متعلق,غیر اخلاقی اور ذاتیات پر مبنی تبصرہ سے پرہیز کیجئے, مصنف ایسا تبصرہ حذف کرنے کا حق رکھتا ہے نیز مصنف کا مبصر کی رائے سے متفق ہونا ضروری نہیں۔

اگر آپ کے کمپوٹر میں اردو کی بورڈ انسٹال نہیں ہے تو اردو میں تبصرہ کرنے کے لیے ذیل کے اردو ایڈیٹر میں تبصرہ لکھ کر اسے تبصروں کے خانے میں کاپی پیسٹ کرکے شائع کردیں۔

.